Al-Buruj( البروج)
Original,King Fahad Quran Complex(الأصلي,مجمع الملك فهد القرآن)
show/hide
Tahir ul Qadri(طاہر القادری)
show/hide
بِسمِ اللَّهِ الرَّحمٰنِ الرَّحيمِ وَالسَّماءِ ذاتِ البُروجِ(1)
برجوں (یعنی کہکشاؤں) والے آسمان کی قَسم،(1)
وَاليَومِ المَوعودِ(2)
اور اس دن کی قَسم جس کا وعدہ کیا گیا ہے،(2)
وَشاهِدٍ وَمَشهودٍ(3)
جو (اس دن) حاضر ہوگا اس کی قَسم اور جو کچھ حاضر کیا جائے گا اس کی قَسم،(3)
قُتِلَ أَصحٰبُ الأُخدودِ(4)
خندقوں والے (لوگ) ہلاک کر دیے گئے،(4)
النّارِ ذاتِ الوَقودِ(5)
(یعنی) اس بھڑکتی آگ (والے) جو بڑے ایندھن سے (جلائی گئی) تھی،(5)
إِذ هُم عَلَيها قُعودٌ(6)
جب وہ اس کے کناروں پر بیٹھے تھے،(6)
وَهُم عَلىٰ ما يَفعَلونَ بِالمُؤمِنينَ شُهودٌ(7)
اور وہ خود گواہ ہیں جو کچھ وہ اہلِ ایمان کے ساتھ کر رہے تھے (یعنی انہیں آگ میں پھینک پھینک کر جلا رہے تھے)،(7)
وَما نَقَموا مِنهُم إِلّا أَن يُؤمِنوا بِاللَّهِ العَزيزِ الحَميدِ(8)
اور انہیں ان (مومنوں) کی طرف سے اور کچھ (بھی) ناگوار نہ تھا سوائے اس کے کہ وہ اللہ پر ایمان لے آئے تھے جو غالب (اور) لائقِ حمد و ثنا ہے،(8)
الَّذى لَهُ مُلكُ السَّمٰوٰتِ وَالأَرضِ ۚ وَاللَّهُ عَلىٰ كُلِّ شَيءٍ شَهيدٌ(9)
جس کے لئے آسمانوں اور زمین کی (ساری) بادشاہت ہے، اور اللہ ہر چیز پر گواہ ہے،(9)
إِنَّ الَّذينَ فَتَنُوا المُؤمِنينَ وَالمُؤمِنٰتِ ثُمَّ لَم يَتوبوا فَلَهُم عَذابُ جَهَنَّمَ وَلَهُم عَذابُ الحَريقِ(10)
بیشک جن لوگوں نے مومن مردوں اور مومن عورتوں کو اذیت دی پھر توبہ (بھی) نہ کی تو ان کے لئے عذابِ جہنم ہے اور ان کے لئے (بالخصوص) آگ میں جلنے کا عذاب ہے،(10)
إِنَّ الَّذينَ ءامَنوا وَعَمِلُوا الصّٰلِحٰتِ لَهُم جَنّٰتٌ تَجرى مِن تَحتِهَا الأَنهٰرُ ۚ ذٰلِكَ الفَوزُ الكَبيرُ(11)
بیشک جو لوگ ایمان لائے اور نیک عمل کرتے رہے ان کے لئے جنتیں ہیں جن کے نیچے سے نہریں جاری ہیں، یہی بڑی کامیابی ہے،(11)
إِنَّ بَطشَ رَبِّكَ لَشَديدٌ(12)
بیشک آپ کے رب کی پکڑ بہت سخت ہے،(12)
إِنَّهُ هُوَ يُبدِئُ وَيُعيدُ(13)
بیشک وہی پہلی بار پیدا فرماتا ہے اور وہی دوبارہ پیدا فرمائے گا،(13)
وَهُوَ الغَفورُ الوَدودُ(14)
اور وہ بڑا بخشنے والا بہت محبت فرمانے والا ہے،(14)
ذُو العَرشِ المَجيدُ(15)
مالکِ عرش (یعنی پوری کائنات کے تختِ اقتدار کا مالک) بڑی شان والا ہے،(15)
فَعّالٌ لِما يُريدُ(16)
وہ جو بھی ارادہ فرماتا ہے (اسے) خوب کر دینے والا ہے،(16)
هَل أَتىٰكَ حَديثُ الجُنودِ(17)
کیا آپ کے پاس لشکروں کی خبر پہنچی ہے،(17)
فِرعَونَ وَثَمودَ(18)
فرعون اور ثمود (کے لشکروں) کے،(18)
بَلِ الَّذينَ كَفَروا فى تَكذيبٍ(19)
بلکہ ایسے کافر (ہمیشہ حق کو) جھٹلانے میں (ہی کوشاں رہتے) ہیں،(19)
وَاللَّهُ مِن وَرائِهِم مُحيطٌ(20)
اور اللہ اُن کے گرد و پیش سے (انہیں) گھیرے ہوئے ہے،(20)
بَل هُوَ قُرءانٌ مَجيدٌ(21)
بلکہ یہ بڑی عظمت والا قرآن ہے،(21)
فى لَوحٍ مَحفوظٍ(22)
(جو) لوحِ محفوظ میں (لکھا ہوا) ہے،(22)