At-Tariq( الطارق)
Original,King Fahad Quran Complex(الأصلي,مجمع الملك فهد القرآن)
show/hide
Abul A'ala Maududi(ابوالاعلی مودودی)
show/hide
بِسمِ اللَّهِ الرَّحمٰنِ الرَّحيمِ وَالسَّماءِ وَالطّارِقِ(1)
قسم ہے آسمان کی اور رات کو نمودار ہونے والے کی(1)
وَما أَدرىٰكَ مَا الطّارِقُ(2)
اور تم کیا جانو کہ وہ رات کو نمودار ہونے والا کیا ہے؟(2)
النَّجمُ الثّاقِبُ(3)
چمکتا ہوا تارا(3)
إِن كُلُّ نَفسٍ لَمّا عَلَيها حافِظٌ(4)
کوئی جان ایسی نہیں ہے جس کے اوپر کوئی نگہبان نہ ہو(4)
فَليَنظُرِ الإِنسٰنُ مِمَّ خُلِقَ(5)
پھر ذرا انسان یہی دیکھ لے کہ وہ کس چیز سے پیدا کیا گیا ہے(5)
خُلِقَ مِن ماءٍ دافِقٍ(6)
ایک اچھلنے والے پانی سے پیدا کیا گیا ہے(6)
يَخرُجُ مِن بَينِ الصُّلبِ وَالتَّرائِبِ(7)
جو پیٹھ اور سینے کی ہڈیوں کے درمیان سے نکلتا ہے(7)
إِنَّهُ عَلىٰ رَجعِهِ لَقادِرٌ(8)
یقیناً وہ (خالق) اُسے دوبارہ پیدا کرنے پر قادر ہے(8)
يَومَ تُبلَى السَّرائِرُ(9)
جس روز پوشیدہ اسرار کی جانچ پڑتال ہوگی(9)
فَما لَهُ مِن قُوَّةٍ وَلا ناصِرٍ(10)
اُس وقت انسان کے پاس نہ خود اپنا کوئی زور ہوگا اور نہ کوئی اس کی مدد کرنے والا ہوگا(10)
وَالسَّماءِ ذاتِ الرَّجعِ(11)
قسم ہے بارش برسانے والے آسمان کی(11)
وَالأَرضِ ذاتِ الصَّدعِ(12)
اور (نباتات اگتے وقت) پھٹ جانے والی زمین کی(12)
إِنَّهُ لَقَولٌ فَصلٌ(13)
یہ ایک جچی تلی بات ہے(13)
وَما هُوَ بِالهَزلِ(14)
ہنسی مذاق نہیں ہے(14)
إِنَّهُم يَكيدونَ كَيدًا(15)
یہ لوگ چالیں چل رہے ہیں(15)
وَأَكيدُ كَيدًا(16)
اور میں بھی ایک چال چل رہا ہوں(16)
فَمَهِّلِ الكٰفِرينَ أَمهِلهُم رُوَيدًا(17)
پس چھوڑ دو اے نبیؐ، اِن کافروں کو اک ذرا کی ذرا اِن کے حال پر چھوڑ دو(17)