Al-Mursalat( المرسلات)
Original,King Fahad Quran Complex(الأصلي,مجمع الملك فهد القرآن)
show/hide
Abul A'ala Maududi(ابوالاعلی مودودی)
show/hide
بِسمِ اللَّهِ الرَّحمٰنِ الرَّحيمِ وَالمُرسَلٰتِ عُرفًا(1)
قسم ہے اُن (ہواؤں) کی جو پے در پے بھیجی جاتی ہیں(1)
فَالعٰصِفٰتِ عَصفًا(2)
پھر طوفانی رفتار سے چلتی ہیں(2)
وَالنّٰشِرٰتِ نَشرًا(3)
اور (بادلوں کو) اٹھا کر پھیلاتی ہیں(3)
فَالفٰرِقٰتِ فَرقًا(4)
پھر (اُن کو) پھاڑ کر جدا کرتی ہیں(4)
فَالمُلقِيٰتِ ذِكرًا(5)
پھر (دلوں میں خدا کی) یاد ڈالتی ہیں(5)
عُذرًا أَو نُذرًا(6)
عذر کے طور پر یا ڈراوے کے طور پر(6)
إِنَّما توعَدونَ لَوٰقِعٌ(7)
جس چیز کا تم سے وعدہ کیا جا رہا ہے وہ ضرور واقع ہونے والی ہے(7)
فَإِذَا النُّجومُ طُمِسَت(8)
پھر جب ستارے ماند پڑ جائیں گے(8)
وَإِذَا السَّماءُ فُرِجَت(9)
اور آسمان پھاڑ دیا جائے گا(9)
وَإِذَا الجِبالُ نُسِفَت(10)
اور پہاڑ دھنک ڈالے جائیں گے(10)
وَإِذَا الرُّسُلُ أُقِّتَت(11)
اور رسولوں کی حاضری کا وقت آ پہنچے گا (اس روز وہ چیز واقع ہو جائے گی)(11)
لِأَىِّ يَومٍ أُجِّلَت(12)
کس روز کے لیے یہ کام اٹھا رکھا گیا ہے؟(12)
لِيَومِ الفَصلِ(13)
فیصلے کے روز کے لیے(13)
وَما أَدرىٰكَ ما يَومُ الفَصلِ(14)
اور تمہیں کیا خبر کہ وہ فیصلے کا دن کیا ہے؟(14)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(15)
تباہی ہے اُس دن جھٹلانے والوں کے لیے(15)
أَلَم نُهلِكِ الأَوَّلينَ(16)
کیا ہم نے اگلوں کو ہلاک نہیں کیا؟(16)
ثُمَّ نُتبِعُهُمُ الءاخِرينَ(17)
پھر اُنہی کے پیچھے ہم بعد والوں کو چلتا کریں گے(17)
كَذٰلِكَ نَفعَلُ بِالمُجرِمينَ(18)
مجرموں کے ساتھ ہم یہی کچھ کیا کرتے ہیں(18)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(19)
تباہی ہے اُس دن جھٹلانے والوں کے لیے(19)
أَلَم نَخلُقكُم مِن ماءٍ مَهينٍ(20)
کیا ہم نے ایک حقیر پانی سے تمہیں پیدا نہیں کیا(20)
فَجَعَلنٰهُ فى قَرارٍ مَكينٍ(21)
اور ایک مقررہ مدت تک،(21)
إِلىٰ قَدَرٍ مَعلومٍ(22)
اُسے ایک محفوظ جگہ ٹھیرائے رکھا؟(22)
فَقَدَرنا فَنِعمَ القٰدِرونَ(23)
تو دیکھو، ہم اِس پر قادر تھے، پس ہم بہت اچھی قدرت رکھنے والے ہیں(23)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(24)
تباہی ہے اُس روز جھٹلانے والوں کے لیے(24)
أَلَم نَجعَلِ الأَرضَ كِفاتًا(25)
کیا ہم نے زمین کو سمیٹ کر رکھنے والی نہیں بنایا(25)
أَحياءً وَأَموٰتًا(26)
زندوں کے لیے بھی اور مُردوں کے لیے بھی(26)
وَجَعَلنا فيها رَوٰسِىَ شٰمِخٰتٍ وَأَسقَينٰكُم ماءً فُراتًا(27)
اور اس میں بلند و بالا پہاڑ جمائے، اور تمہیں میٹھا پانی پلایا؟(27)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(28)
تباہی ہے اُس روز جھٹلانے والوں کے لیے(28)
انطَلِقوا إِلىٰ ما كُنتُم بِهِ تُكَذِّبونَ(29)
چلو اب اُسی چیز کی طرف جسے تم جھٹلایا کرتے تھے(29)
انطَلِقوا إِلىٰ ظِلٍّ ذى ثَلٰثِ شُعَبٍ(30)
چلو اُس سائے کی طرف جو تین شاخوں والا ہے(30)
لا ظَليلٍ وَلا يُغنى مِنَ اللَّهَبِ(31)
نہ ٹھنڈک پہنچانے والا اور نہ آگ کی لپٹ سے بچانے والا(31)
إِنَّها تَرمى بِشَرَرٍ كَالقَصرِ(32)
وہ آگ محل جیسی بڑی بڑی چنگاریاں پھینکے گی(32)
كَأَنَّهُ جِمٰلَتٌ صُفرٌ(33)
(جو اچھلتی ہوئی یوں محسوس ہوں گی) گویا کہ وہ زرد اونٹ ہیں(33)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(34)
تباہی ہے اُس روز جھٹلانے والوں کے لیے(34)
هٰذا يَومُ لا يَنطِقونَ(35)
یہ وہ دن ہے جس میں وہ نہ کچھ بولیں گے(35)
وَلا يُؤذَنُ لَهُم فَيَعتَذِرونَ(36)
اور نہ اُنہیں موقع دیا جائے گا کہ کوئی عذر پیش کریں(36)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(37)
تباہی ہے اُس دن جھٹلانے والوں کے لیے(37)
هٰذا يَومُ الفَصلِ ۖ جَمَعنٰكُم وَالأَوَّلينَ(38)
یہ فیصلے کا دن ہے ہم نے تمہیں اور تم سے پہلے گزرے ہوئے لوگوں کو جمع کر دیا ہے(38)
فَإِن كانَ لَكُم كَيدٌ فَكيدونِ(39)
اب اگر کوئی چال تم چل سکتے ہو تو میرے مقابلہ میں چل دیکھو(39)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(40)
تباہی ہے اُس دن جھٹلانے والوں کے لیے(40)
إِنَّ المُتَّقينَ فى ظِلٰلٍ وَعُيونٍ(41)
متقی لوگ آج سایوں اور چشموں میں ہیں(41)
وَفَوٰكِهَ مِمّا يَشتَهونَ(42)
اور جو پھل وہ چاہیں (اُن کے لیے حاضر ہیں)(42)
كُلوا وَاشرَبوا هَنيـًٔا بِما كُنتُم تَعمَلونَ(43)
کھاؤ اور پیو مزے سے اپنے اُن اعمال کے صلے میں جو تم کرتے رہے ہو(43)
إِنّا كَذٰلِكَ نَجزِى المُحسِنينَ(44)
ہم نیک لوگوں کو ایسی ہی جزا دیتے ہیں(44)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(45)
تباہی ہے اُس روز جھٹلانے والوں کے لیے(45)
كُلوا وَتَمَتَّعوا قَليلًا إِنَّكُم مُجرِمونَ(46)
کھا لو اور مزے کر لو تھوڑے دن حقیقت میں تم لوگ مجرم ہو(46)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(47)
تباہی ہے اُس روز جھٹلانے والوں کے لیے(47)
وَإِذا قيلَ لَهُمُ اركَعوا لا يَركَعونَ(48)
جب اِن سے کہا جاتا ہے کہ (اللہ کے آگے) جھکو تو نہیں جھکتے(48)
وَيلٌ يَومَئِذٍ لِلمُكَذِّبينَ(49)
تباہی ہے اُس روز جھٹلانے والوں کے لیے(49)
فَبِأَىِّ حَديثٍ بَعدَهُ يُؤمِنونَ(50)
اب اِس (قرآن) کے بعد اور کونسا کلام ایسا ہو سکتا ہے جس پر یہ ایمان لائیں؟(50)