Al-Infitar( الإنفطار)
Original,King Fahad Quran Complex(الأصلي,مجمع الملك فهد القرآن)
show/hide
Abul A'ala Maududi(ابوالاعلی مودودی)
show/hide
بِسمِ اللَّهِ الرَّحمٰنِ الرَّحيمِ إِذَا السَّماءُ انفَطَرَت(1)
جب آسمان پھٹ جائے گا(1)
وَإِذَا الكَواكِبُ انتَثَرَت(2)
اور جب تارے بکھر جائیں گے(2)
وَإِذَا البِحارُ فُجِّرَت(3)
اور جب سمندر پھاڑ دیے جائیں گے(3)
وَإِذَا القُبورُ بُعثِرَت(4)
اور جب قبریں کھول دی جائیں گی(4)
عَلِمَت نَفسٌ ما قَدَّمَت وَأَخَّرَت(5)
اُس وقت ہر شخص کو اُس کا اگلا پچھلا سب کیا دھرا معلوم ہو جائے گا(5)
يٰأَيُّهَا الإِنسٰنُ ما غَرَّكَ بِرَبِّكَ الكَريمِ(6)
اے انسان، کس چیز نے تجھے اپنے اُس رب کریم کی طرف سے دھوکے میں ڈال دیا(6)
الَّذى خَلَقَكَ فَسَوّىٰكَ فَعَدَلَكَ(7)
جس نے تجھے پیدا کیا، تجھے نک سک سے درست کیا، تجھے متناسب بنایا(7)
فى أَىِّ صورَةٍ ما شاءَ رَكَّبَكَ(8)
اور جس صورت میں چاہا تجھ کو جوڑ کر تیار کیا؟(8)
كَلّا بَل تُكَذِّبونَ بِالدّينِ(9)
ہرگز نہیں، بلکہ (اصل بات یہ ہے کہ) تم لوگ جزا و سزا کو جھٹلاتے ہو(9)
وَإِنَّ عَلَيكُم لَحٰفِظينَ(10)
حالانکہ تم پر نگراں مقرر ہیں(10)
كِرامًا كٰتِبينَ(11)
ایسے معزز کاتب(11)
يَعلَمونَ ما تَفعَلونَ(12)
جو تمہارے ہر فعل کو جانتے ہیں(12)
إِنَّ الأَبرارَ لَفى نَعيمٍ(13)
یقیناً نیک لوگ مزے میں ہوں گے(13)
وَإِنَّ الفُجّارَ لَفى جَحيمٍ(14)
اور بے شک بدکار لوگ جہنم میں جائیں گے(14)
يَصلَونَها يَومَ الدّينِ(15)
جزا کے دن وہ اس میں داخل ہوں گے(15)
وَما هُم عَنها بِغائِبينَ(16)
اور اُس سے ہرگز غائب نہ ہو سکیں گے(16)
وَما أَدرىٰكَ ما يَومُ الدّينِ(17)
اور تم کیا جانتے ہو کہ وہ جزا کا دن کیا ہے؟(17)
ثُمَّ ما أَدرىٰكَ ما يَومُ الدّينِ(18)
ہاں، تمہیں کیا خبر کہ وہ جزا کا دن کیا ہے؟(18)
يَومَ لا تَملِكُ نَفسٌ لِنَفسٍ شَيـًٔا ۖ وَالأَمرُ يَومَئِذٍ لِلَّهِ(19)
یہ وہ دن ہے جب کسی شخص کے لیے کچھ کرنا کسی کے بس میں نہ ہوگا، فیصلہ اُس دن بالکل اللہ کے اختیار میں ہوگا(19)